اہم ترین خبریںمقبوضہ فلسطین

نابلس میں فلسطینیوں کا یہودی آباد کاروں کی گاڑی پر پٹرول بم حملہ

شیعیت نیوز: فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے شمالی شہر نابلس میں فلسطینیوں نے یہودی آباد کاروں کی گاڑی پر پٹرول بم حملہ کیا جس کے نتیجے میں گاڑی کو نقصان پہنچا تاہم اس حملے میں کسی یہودی آباد کار کے زخمی ہونے کی اطلاع نہیں ملی۔

عبرانی ذرائع ابلاغ کے مطابق یہودی فلسطینی شہریوں نے تفوح اور مجدالیم یہودی کالونیوں کے قریب آباد کاروں کے گاڑیوں پر سنگ باری کی اور ان پر پٹرول بم حملے کیے۔

ذرائع نے بتایا کہ فلسطینیوں کے پٹرول بم سے حملے میں یہودی آباد کاروں کی گاڑی کو نقصان پہنچا۔

یہ بھی پڑھیں : مغربی کنارے میں انقلاب کی آگ قابضین کا خاتمہ کیے بغیر نہیں بھجنے والی، ترجمان حازم قاسم

ادھر ایک دوسری پیش رفت میں یہودی آباد کاروں کے ایک گروپ نے فلسطینی صحافیوں پر حملہ کیا۔ ان صحافیوں کو اس وقت نشانہ بنایا گیا جب وہ وسطی فلسطین میں وادی اردن میں یہودی آباد کاروں کی انتقامی کارروائیوں کی تصاویر بنا رہے تھے۔

مقامی فلسطینی ذرائع کے مطابق یہودی آباد کاروں اور اسرائیلی فوج کے حملے میں رام اللہ میں بیتن کے مقام پر تین فلسطینی صحافی زخمی ہوگئے۔

دوسری جانب اسرائیل کی دامون جیل میں زیر حراست سات فلسطینی خواتین کو کورونا کا شکار ہونے کےدعوے کے تحت قید تنہائی میں ڈال دیا گیا۔ ان میں سے تین خواتین کا تعلق مقبوضہ بیت المقدس سے بتایا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : اسرائیلی فوج گزر اوقات کیلئے کوڑا کباڑ چھانٹنے پر مجبور

رپورٹ کے مطابق دامون جیل میں قید فلسطینی خواتین شروق دویات، فدویٰ حمادہ، ربی عاصی، شذی عودہ، تسنیم الاسد، شروق البدن اور نورھان عواد کو کورونا کا شکار ہونے کے دعوے کے تحت قید دوسری اسیرات سے الگ تھلگ کردیا گیا ہے۔

فلسطینی محکمہ امور اسیران نے ایک بیان میں اسیرات کی صحت کی تمام تر ذمہ داری اسرائیلی ریاست پرعائد کی گئی ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close