مشرق وسطی

شام کو عرب لیگ میں واپس لانے کیلئے تگ و دو شروع

شیعیت نیوز: عرب لیگ کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل نے کہا ہے کہ اس اتحاد کے رکن ممالک شام کو عرب لیگ میں واپس لانے کیلئے بھرپور کوشش کر رہے ہیں۔

ایران پریس کی رپورٹ کے مطابق عرب لیگ کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل حسام زکی نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے کہ عرب لیگ کے بعض رکن ممالک خاص طور سے الجزائر شام کو عرب لیگ میں واپس لانے کیلئے بھرپور کوشش کر رہے ہیں کہا کہ شام کی دوبارہ عرب لیگ میں واپسی الجزائر اجلاس سے قبل یا اس کے بعد ہو سکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ عرب لیگ شام کی واپسی کا خیرمقدم کرے گا۔ الجزائر میں عرب لیگ کا دو روزہ اجلاس یکم نومبر کو شروع ہو گا۔

واضح رہے کہ 2011 میں شام کا بحران شروع ہونے کے بعد عرب لیگ نے سعودی عرب اور عرب امارات کے دباؤ میں آ کر شام کی رکنیت معطل کر دی تھی اور بعض عرب ممالک نے شام پر دباؤ ڈالنے کے مقصد سے دمشق کے ساتھ سفارتی روابط ختم کئے، تاہم اب جبکہ اسلامی جمہوریہ کے اتحادی بشار اسد کی حکومت دہشت گردوں کو شکست دینے میں کامیاب ہو چکی ہے تو عرب لیگ، عرب اور علاقے کے ممالک شام کے ساتھ سفارتی تعلقات کی دوبارہ برقراری پر مجبور ہو گئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : کویتی ولی عہد عہد شیخ الاحمد الجابر الصباح نے پارلیمنٹ تحلیل کردی

دوسری جانب شام کی وزارت ٹرانسپورٹ نے اعلان کیا ہے کہ دمشق کے بین الاقوامی ہوائی اڈے کو آج سے معمول کے مطابق تمام بین الاقوامی پروازوں کے لئے کھول دیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق، شامی وزارت ٹرانسپورٹ نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ غاصب اسرائیلی جارحیت کے بعد ہوائی اڈے کے رن وے اور فنی خرابیوں سمیت اور استقبالیہ ہالوں کو پہنچنے والے بھاری نقصانات کی تعمیر نو اور مرمت کا کام مکمل کر لیا گیا ہے اور 23جون سے تمام ایئر لائنز دمشق ہوائی اڈے سے پرواز کر سکتی ہیں۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ شامی وزارت ٹرانسپورٹ نے 10جون کو دمشق کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر غاصب صہیونی حکومت کی فوجی جارحیت کے حوالے سے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ دمشق کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر لینڈ اور پرواز کرنے والی تمام ائیر لائنز رن وے اور ہوائی اڈے کو شدید نقصان پہنچنے کے باعث معطل کر دی گئی ہیں۔

متعلقہ مضامین

Back to top button