لبنان

لبنانی سرحدی علاقے پر اسرائیلی فوجیوں کی لوگوں کو ہراساں کرنے کی کوشش

شیعیت نیوز: ایک طرف تو اسرائیل اور لبنان کے مابین دریائی حدود کا تنازعہ چل رہا ہے تو دوسری جانب اسرائیلی فوجی لبنان کے سرحدی علاقے میں کسانوں اور چرواہوں میں اپنے شدت پسندانہ اقدامات سے خوف و ہراس پھیلا رہے ہیں۔

صیہونی فوجیوں نےکل (بدھ) لبنانی سرحدی علاقے میں ’’رویساٹ العلم‘‘ کیمپ میں ’’کفر شوبا‘‘ کے پہاڑی ٹیلوں اور اس سے ملحقہ علاقوں پر متعدد لبنانی چرواہوں پر گولیاں چلا کر انہیں ہراساں کرنے کی کوشش کی، جب وہ اپنے ریوڑ کو گھاس چروانے میں مصروف تھے۔

یہ بھی پڑھیں : لبنان میں اسرائیل کی شکست کا حقیقی سبب حزب اللہ کی طاقت ہے، اسرائیلی ماہر بیریئل

لبنانی میڈیا نے رپورٹ دی ہے کہ عام چرواہوں کو ڈرانے کی خاطر صیہونی فوج نے ’’مرکاوا‘‘ ٹینک میں گولے لوڈ کئے اور ان کی طرف نشانہ بندی بھی کی۔

ایک اور نیوز ایجنسی نے اس حوالے سے رپورٹ دی ہے کہ عام لوگوں میں خوف و ہراس پیدا کرنے کی خاطر اسرائیلی فوج کی جانب سے چالیس کے قریب گولیاں چلائی گئی ہیں۔

میڈیا ذرائع نے گذشتہ روز بھی کچھ ایسی ہی خبریں دی تھیں کہ ’’سھل مرجعیون‘‘ میں اپنی زمینوں پر کاشت کاری کرتے ہوئے کسانوں کو گشت پر مامور اسرائیلی فوجیوں نے ڈرانے اور دھمکانے کی کوشش کی۔

یہ بھی پڑھیں : دعا زہرا اغواء کیس،خاندانوں کو تباہی سے بچانے میں ریاست کردار ادا کرے،علامہ راجہ ناصرعباس

رپورٹ کے مطابق، اسی مقصد کی خاطر ایک صہیونی فوجی نے بندوق کے زور پر ان کسانوں سے اپنی زمینیں ترک کرنے کا کہا اور دھمکی دی کہ ایسا نہ کرنے کی صورت میں انہیں گولی مار دی جائے گی۔

یاد رہے کہ یہ اقدامات ایک ایسے وقت میں کیے جا رہے ہیں، جب لبنان کے ساتھ متنازع علاقے میں ایک اسرائیلی جہاز گیس نکالنے کے لیے پہنچا، جس کے بعد دونوں ممالک میں سرحدی کشیدگی دوبارہ شروع ہوگئی ہے۔

متعلقہ مضامین

Back to top button