اہم ترین خبریںعراق

عراق میں عالمی کانفرنس ، فلسطینی کاز کی ہر سطح پر حمایت کا مطالبہ

شیعیت نیوز: عراق کے مقدس شہر کربلا میں دو روزہ عالمی کانفرنس ’’نداء الاقصی‘‘کا انعقاد کیا گیا۔ کانفرس میں دنیا بھر کے مختلف ممالک کی دو سو سے زائد مذہبی اور علمی شخصیات نے شرکت کی جبکہ کانفرس کا محور «حسینی تحریک کے اصول اور بیت المقدس کی آزادی اور فلسطینی عوام کے انقلاب میں اس کا کرادار» رکھا گیا تھا جو آج بدھ کے روز اختتامی اعلامیے کے ساتھ اختتام پذیر ہوئی۔

رپورٹ کے مطابق عالمی کانفرنس کے اختتامی اعلامیے میں اپیل کی گئی کہ عراق کی دینی مرجعیت کی ندا پر لیبک کہتے ہوئے فلسطینی عوام کے لئے مالی امداد کی جائے اور اس بات پر زور دیا گیا کہ فلسطین کا معاملہ ایک انسانی، اسلامی اور عالمی پہلووں کا حامل معاملہ ہے۔

عالمی کانفرنس کے اختتامی سیشن میں شرکا اور مقررین نے مسلمانوں کے وحدت کلمہ اور مشترکہ مؤقف اپنانے پر زور دیا اور فلسطینی عوام کی حمایت اور بعض عربی ممالک کی غاصب اسرائیل کے ساتھ بحالیِ تعلقات کی مذمت کا مطالبہ کیا۔

مقررین نے اس بات پر زور دیا کہ قدس شریف اور مسجد الاقصی امت کا سب سے پہلا کاز ہے اور اس کی آزادی صرف امت کے فرزندوں کے ہاتھوں ہی حاصل ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں : اسرائیلی دھمکیوں پر ایران کا ردعمل تباہ کن ہوگا، جنرل غلام علی رشید

عراق کے دار الافتاء کے ترجمان شیخ عامر البیاتی نے اپنے خطاب میں کہا کہ عراق فلسطین کی فتح کے لئے بدستور ایثار کا مظاہرہ کرتا رہے گا اور ہم اپنی نسلوں کی اسی بنیاد پر پرورش کریں گے۔

انہوں نے فلسطینی عوام کے انقلاب اور جہاد کی حمایت کرنے کی ضرورت پر زور دیا اور کہا کہ فلسطین کا مسئلہ انتہائی بنیادی مسئلہ ہے۔

حرم مطہر امام حسین کے نمائندنے شیخ خیر الدین الھادی نے کہا کہ ندائے الاقصی کا پیغام اس بات کی تصدیق کرتا ہے کہ استبداد اور استعمار کے مقابلے میں فلسطینی عوام اکیلے نہیں ہیں۔

لبنان میں مسلم اسکالرز ایسوسی ایشن کے بورڈ آف ٹرسٹیز کے چیئرمین الشیخ غازی حنینا نے زور دے کر کہا کہ ہمیں فلسطین کے ساتھ رہنا چاہئے۔ انہوں نے قابض دشمن کے خلاف فلسطینی قوم کی تحریک مزاحمت کی حمایت جاری رکھنے کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ فلسطینی قوم کو اپنی آزادی کی تحریک کے لیے مسلح کرنے کی ضرورت ہے۔

مصر کی جامعہ الازھر کے ایک سرکردہ اسکالرمنصور مندرو نے کہا کہ مسجد اقصیٰ مسلم امہ کی امید اور اس کا اعزاز ہے۔

کانفرنس کے شرکاء نے اس بات پر زور دیا کہ اسلامی مزاحمت فلسطین اور تمام مسلم ممالک میں باقی ہے۔ یہ کہ مذاہب اور مذہبی لوگوں کا فرض ہے کہ وہ فلسطینی قوم کے نصب العین کی حمایت کریں۔

عالمی نداء الاقصی کانفرنس اربعین امام حسین (ع) کے ایام میں منعقد ہوئی اور اس کا عنوان «حسینی تحریک کے اصول اور بیت المقدس کی آزادی اور فلسطینی عوام کے انقلاب میں اس کا کرادار» رکھا گیا تھا۔

قابل ذکر ہے کہ کانفرنس کا اہتمام کچھ اداروں کے باہمی اشتراک اور تعاون سے کیا گیا تھا جن میں امام حسین (ع) کے حرم مطہر کا سیکریٹریٹ، عراق کے اہل سنت کا دار الافتاء اور گلوبل کمپین ٹو ریٹرن ٹو فلسطین بھی شامل تھے۔

متعلقہ مضامین

Back to top button