اہم ترین خبریںپاکستان

علامہ علی حسنین وجدانی کی توہین آمیزانداز میں عدالت میں پیشی، 10روزہ جسمانی ریمانڈ کی منظوری

واضح رہے کہ تکفیری دہشت گرد عناصر کی ایماء پر سکیورٹی اداروں نے علامہ علی حسنین وجدانی کو ایام شہادت حضرت فاطمہ زہراؑ کے دوران دختر رسولؐ کی مظلومیت اور ان کا حق ملکیت بیان کرنےکو جرم قرار دیتے ہوئے گرفتار کیا ہے ۔

شیعیت نیوزـ: کوئٹہ میں کاؤنٹر ٹیرارزم ڈیپارٹمنٹ (CTD ) کے ہاتھوں گرفتار نامور شیعہ عالم دین اور امام جمعہ علامہ علی حسنین وجدانی کو 10روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا گیا۔ جید عالم دین کو دونوں ہاتھوں میں ہتھکڑیاں لگا کر توہین آمیز انداز میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ میں پیش کیا گیا۔

تفصیلات کےمطابق گذشتہ روز اہل خانہ کی موجودگی میں کوئٹہ کینٹ کے سامنے سے سی ٹی ڈی کے ہاتھوں گرفتار ہونے والے علامہ علی حسنین وجدانی کو آج ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ کوئٹہ میں پیش کیا گیا، علامہ علی حسنین وجدانی کو سی ٹی ڈی اہلکاروں نے انتہائی توہین آمیز انداز میں دونوں ہاتھوں میں ہتھکڑیاں لگا کر ایک پیشہ ورمجرم کے انداز میں عدالت کے روبرو پیش کیا۔

یہ بھی پڑھیں: کربلائے معلیٰ میں حرم مولاابوالفضل العباسؑ کے نزدیک ہوٹل میں خطرناک آتشزدگی

معرزعدالت کے جج نے سماعت کے بعد جید عالم دین کو 10 روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا ہے ۔ عدالت نے ایک جید عالم دین کی حرمت کا بھی خیال نہ کیا اور انہیں ایک عادی مجرم کی طرح ریمانڈ پر پولیس کے سپرد کردیا۔

واضح رہے کہ تکفیری دہشت گرد عناصر کی ایماء پر سکیورٹی اداروں نے علامہ علی حسنین وجدانی کو ایام شہادت حضرت فاطمہ زہراؑ کے دوران دختر رسولؐ کی مظلومیت اور ان کا حق ملکیت بیان کرنےکو جرم قرار دیتے ہوئے گرفتار کیا ہے ۔

یہاں یہ بات بھی ذہن نشین رہے کہ دنیا بھرکی طرح پاکستان میں بھی گذشتہ کچھ سالوں سے ایام فاطمیہ ؑ کے انعقاد میں کافی اضافہ ہوا ہے جس سے تکفیری و ناصبی قوتیں اور ریاستی ادارے مسلسل خائف دکھائی دیتے ہیں۔

متعلقہ مضامین

Back to top button