دنیا

یورپی پارلیمنٹ کی ویب سائٹ پر سائبر حملہ

شیعیت نیوز: یورپی پارلیمنٹ کی ویب سائٹ کو روسی حکومت کے خلاف ووٹ دینے کے بعد ہیکرز نے حملہ کر دیا۔

بدھ کے روز یورپی پارلیمنٹ کی ویب سائٹ پر سائبر حملہ اس قرارداد پر ووٹنگ کے بعد کیا گیا جس میں روس کو دہشت گردی کی سرپرستی کرنے والے ریاست کے طور پر شناخت کیا گیا تھا۔

یورپی پارلیمنٹ کی صدر روبرٹا میٹسولا نے ٹویٹر پر لکھا کہ ابھی کے لیے یہ کہنا ضروری ہے کہ یہ ایک جدید ترین سائبر حملہ ہے اور اس حملے کا ذمہ دار ایک روس نواز گروپ ہے۔

میٹسولا کی جانب سے ان الفاظ کا اظہار کیا گیا ہے جبکہ پارلیمنٹ کے سپیکر جم ڈوک نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں کہا کہ ویب سائٹ پر خلاف ورزی کی وجہ زیادہ ٹریفک ہے۔

میٹسولا نے کہا کہ یورپی یونین کے آئی ٹی ماہرین اس معاملے کی تحقیقات کر رہے ہیں اور حملے سے نمٹنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے لکھا کہ پارلیمنٹ کی ویب سائٹ پر حملے کی وجہ روسی حکومت کے خلاف ایک بل کی منظوری تھی۔

یورپی پارلیمنٹ کے ارکان نے ایک منفی ووٹ کے مقابلے میں 494 مثبت ووٹوں سے روسی حکومت کو دہشت گردی کا حامی قرار دیا۔

یہ بھی پڑھیں : تحریک مجاہدین فلسطین نے اسرائیل کی نابودی کا عمل شروع کردیا

دوسری جانب ملائیشیا کے بادشاہ کے محل کی جانب سے جاری بیان کے مطابق شاہ سلطان عبداللہ سلطان احمد شاہ کی جانب سے انور ابراہیم کو ملائیشیا کا نیا وزیراعظم مقرر کردیا گیا۔

انورابراہیم کی پارٹی اور ان کی اتحادی جماعتوں نے حالیہ انتخابات میں 82 سیٹیں جیتی تھیں اور وہ دیگر چھوٹی پارٹیوں کی حمایت سے وزارت اعظمی حاصل کرنے میں کامیاب ہوئے ہیں۔

انور ابراہیم 90 کی دہائی میں سابق وزیراعظم مہاتیرمحمد کے ڈپٹی وزیراعظم تھے۔ انہیں کرپشن اور دیگر الزامات پر قید کی سزا سنائی گئی تھی۔

ملائیشیا میں قبل از وقت عام انتخابات میں سابق وزیراعظم مہاتیر محمد 53 سالوں میں پہلی بار شکست سے دوچار ہوئے ہوئے تھے۔

متعلقہ مضامین

Back to top button