دنیا

ایران کے خلاف امریکی پابندیاں ختم کئے جانے کی ضرورت ہے، انٹونیو گوترش

شیعیت نیوز: اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انٹونیو گوترش نے سلامتی کونسل کی قرارداد بائیس اکتیس پر عمل کے طریقے پر جاری مذاکرات کا خیرمقدم کرتے ہوئے ایران کے خلاف امریکی پابندیاں ختم کئے جانے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔

ارنا کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انٹونیو گوترش نے گذشتہ ہفتے سلامتی کونسل میں قرارداد بائیس اکتیس پر عمل درآمد کے بارے میں ایک رپورٹ پیش کی ہے تاکہ سلامتی کونسل کے چوبیس دسمبر کے اجلاس میں اس رپورٹ کا جائزہ لیا جا سکے۔

اپنی اس رپورٹ میں گوترش نے حالیہ برسوں کے دوران ایٹمی معاہدے کے بارے میں جاری رہنے والی دشواریوں کا ذکر کرتے ہوئے اس معاہدے کو ایران کے ایٹمی مسئلے کا بہترین حل قرار دیا اور ایران کے خلاف امریکی پابندیاں ختم اور ایٹمی معاہدے کے تحت تہران کی جانب سے فائدہ اٹھائے جانے کی ضرورت پر زور دیا۔

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انٹونیو گوترش نے ایٹمی معاہدے کو برسوں پر محیط کثیر فریقی کوششوں اور مذاکرات کا نتیجہ قرار دیا اور اس معاہدے میں امریکہ کی شمولیت اور ایران کے خلاف پابندیوں کو ختم کئے جانے کے طریقہ کار کے بارے میں ویانا میں جاری مذاکرات کا خیر مقدم کیا۔

یہ بھی پڑھیں : ملک کی دفاعی صلاحیتوں کی ترقی پر کسی بھی کوشش سے دریغ نہیں کیا، میجر جنرل باقری

دوسری جانب اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل کی سیاسی اور صلح امور کی معاون روزماری ڈیکارلو نے امریکہ سے ایران کے خلاف ظالمانہ پابندیوں کو خاتمہ کا مطالبہ کیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق روزماری ڈیکارلو نے اقوام متحدہ کی سکیورٹی کونسل کے اجلاس میں کہا کہ اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل نے مشترکہ ایٹمی معاہدے کی روشنی میں ایران کے خلاف امریکی پابندیوں کے خاتمہ کا مطالبہ کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم اقوام متحدہ کے رکن ممالک کو دعوت دیتے ہیں کہ وہ ایران کے ساتھ تجارتی شعبہ میں تعاون برقرار کریں ۔

اس نے مزید کہا کہ ہم اقوام متحدہ کے رکن ممالک اور پرائیویٹ سیکٹر کو دعوت دیتے ہیں کہ وہ تجارتی شعبے میں ایران کے ساتھ تعاون کریں اور موجودہ تجاویز بشمول انسٹیکس میکانزم اور انسانی نوعیت کے سامان پر سوئس تجارتی معاہدے کے مطابق عمل کریں۔

واضح رہے کہ امریکہ کے سابق صدر ٹرمپ مشترکہ ایٹمی معاہدے سے خارج ہوگئے اور اس نے مشترکہ ایٹمی معاہدے کو نقض کرتے ہوئے ایران کے خلاف مزید پابندیاں عائد کردی تھیں۔

متعلقہ مضامین

Back to top button