اہم ترین خبریںدنیا

افغانستان میں شیعہ قوم پر قیامت ٹوٹ پڑی ، لگاتار دوسرے جمعے بھی نمازیوں پر داعشی دہشتگردوں کا بڑا حملہ

امریکہ نے افغانستان سے جاتے جاتے عراق وشام کے شکست خوردہ داعشی دہشت گردوں کو افغانستان میں لاکر آباد کردیا ہے ۔ اب پہلے سے غیر مستحکم افغانستان کو ان داعشی سفاک درندوں کے مدد سے مزید کمزور کرنے کی پالیسی پر عملدرآمدتیزی سے جاری ہے ۔

شیعیت نیوز: افغانستان میں شیعیان حیدرکرارؑ داعش کے نشانے پر،لگاتاردوسرے ہفتے بھی شیعہ جامع میں نماز جمعہ کے اجتماع میں خودکش حملہ، تین درجن کے قریب شیعہ نمازی خاک وخون میں غلطاں ، ہر طرف کہرام مچ گیا، انسانی اعضاء دور دور تک بکھر گئے۔

تفصیلات کے مطابق مسجد فاطمیہ ولایت قندھار میں دوران نماز جمعہ امریکی ودسعودی نواز عالمی دہشت گرد گروہ داعش کے خودکش حملہ آوروں نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا، اس حملے میں اب تک 32 شیعہ نمازی شہید جبکہ 100 سے زائد کے زخمی ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: شیڈول فورمیں شامل تکفیری دہشتگرد سرغنہ اورنگزیب فاروقی کی میرپورخاص میں شیعہ مقدسات کی سر عام توہین، ریاستی اداروں کی تماش بینی

دھماکہ اتنا شدید تھا کہ اس کی آواز دور تک سنائی دی گئی، ہر طرف انسانی جسم کے اعضاء بکھرے پڑے تھے، ہر طرف چیخ وپکار تھی، ہر کوئی اپنے پیاروں کو لاشوں کے ڈھیرمیں تلاش کررہا تھا، شہداء وزخمیوں کوقندھار کے مقامی اسپتال منتقل کردیا گیا ہے ۔

واضح رہے کہ گذشتہ جمعےکے روز بھی افغانستان کے صوبے قندوز میں مرکزی جامع مسجد میں بھی شیعہ نمازیوں پر دوران نماز خودکش حملہ کیا گیا تھا جس میں 100 سے زائد نمازی شہید جبکہ 400 سے زائد شدید زخمی ہوئے تھے ۔

یہ بھی پڑھیں: سرکاری اہلکاروں کے ذریعےشیعیان حیدرکرارؑ کےخلاف پنجاب میں غیر آئینی وغیر قانونی اقدامات کی چشم کشا رپورٹ

امریکہ نے افغانستان سے جاتے جاتے عراق وشام کے شکست خوردہ داعشی دہشت گردوں کو افغانستان میں لاکر آباد کردیا ہے ۔ اب پہلے سے غیر مستحکم افغانستان کو ان داعشی سفاک درندوں کے مدد سے مزید کمزور کرنے کی پالیسی پر عملدرآمدتیزی سے جاری ہے ۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close