ایران

یمن میں انسانیت سوز ناکہ بندی اٹھانا اعتماد پیدا کرنے میں ایک مثبت قدم ہے، امیرعبداللہیان

شیعیت نیوز: ایرانی اسپیکر کے سنیئر مشیر برائے بین الاقوامی امور امیرعبداللہیان نے یمن میں بحران کے حل میں مدد دینے میں سویڈن کی انسانیت سوز کوششوں کی تعریف کرتے ہوئے کہا ہے کہ یمن کی انسانیت سوز ناکہ بندی اٹھانا اعتماد پیدا کرنے میں ایک مثبت قدم ہے۔

یہ بات حسین امیرعبداللہیان نے بدھ کے روز سویڈن کے نمائندے پیٹر سمینہ بی کے ساتھ ایک ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی۔

انہوں نے ایران اور یمن کے درمیان تاریخی ، مذہبی اور ثقافتی تعلقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران ہمیشہ سے ہی اس ملک کے مسائل کو سیاسی مذاکرات کے ذریعہ حل کرنا چاہتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : غزہ کا علاقہ اسرائیل کے سامنے آتش فشاں بن کر پھٹ جائے گا، عبد اللطیف القانوع

امیرعبداللہیان نے یمن میں بحران کے حل میں مدد کے لئے سویڈن کی انسان دوست کوششوں پر زور دیا اور کہا کہ یمن میں بحران صرف سیاست اور جارحیت کو روکنے کے ذریعے ہی حل کیا جاسکتا ہے۔

انہوں نے اس ملک میں جنگ بڑھنے ، بڑھتے ہوئے قحط اور بحران پر امریکہ اور کچھ یورپی ممالک کی اسلحہ کی حمایت پر بھی تنقید کی۔

اس ملاقات میں پیٹر سیمینہ بی نے خطے میں امن و استحکام کے عمل میں ایران کے تعمیری عہدوں پر ایران کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ یمنی بحران کے حل کے لئے مشترکہ اور اہم کوشش کی ضرورت ہے۔

یہ بھی پڑھیں : تمام شعبوں میں عراق سے تعاون پر تیار ہیں، سید محمود علوی

انہوں نے مزید کہا کہ بحران کے حل میں شامل گروپوں کی فعال شرکت میں اضافہ کیا جانا چاہئے۔

سیمینہ نے کہا کہ یمن میں شامل گروپوں کے درمیان بات چیت ہی ملک میں امن اور استحکام کا باعث بنے گی۔

یمن کے لئے سویڈش کے نمائندے نے اس بحران کی عالمی برادری کی ذمہ داری کو اہم اور موثر سمجھا۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close