اہم ترین خبریںلبنان

لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے حکومت بنانے میں ناکامی پر استعفیٰ دے دیا

شیعیت نیوز: لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے حکومت بنانے میں ناکامی پر استعفیٰ دے دیا۔

غیر ملکی خبررساں ادارے (الجزیرہ) کے مطابق لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے صدر مائیکل اون سے طویل مشاورت کے بعد مستعفیٰ ہونے کا فیصلہ کیا، وہ گزشتہ 8 ماہ سے حکومت بنانے میں ناکام رہے تھے۔

لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے گزشتہ روز 24 وزرا پر مبنی کابینہ بنانے کا اعلان کیا تھا جس میں صدر مائیکل عون کی پارٹی کو وزارت خارجہ اور وزارت دفاع سمیت 8 وزارتیں دی گئی تھیں لیکن اس کے باوجود انہیں اپنی کابینہ بنانے میں مشکلات کا سامنا تھا۔

لبنانی وزیراعظم نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ میں حکومت بنانے سے پیچھے ہٹ رہا ہوں کیوں کہ صدر عون آئین میں کچھ ترامیم کرنا چاہتے ہیں لیکن میں نے ان سے کہا کہ اس بار ہمارے درمیان اتفاق نہیں ہو سکے گا، اللہ ہی اس ملک کی حفاظت فرمائے۔

واضح رہے گزشتہ سال سعد الحریری کو دوبارہ وزیراعظم بنانے کے بعد سے ہی لبنان کی سیاست میں ہلچل پائی جاتی ہے جب کہ یورپی یونین نے سیاسی ڈیڈلاک برقرار رہنے کی صورت میں لبنان پر پابندیاں عائد کرنے کی دھمکیاں بھی دے رکھی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : عراق، امریکی فوجی قافلہ الناصریہ میں بم حملے کا شکار

دوسری جانب لبنان میں کابینہ کی تشکیل میں ناکامی کے بعد نامزد وزیراعظم سعد حریری کے حامیوں اور سلامتی کے اداروں کے درمیان جھڑپوں کی خبریں موصول ہوئی ہیں۔

بیروت سے ہمارے نمائندے کے مطابق، جمعرات کی شام سعدحریری کی جانب سے کابینہ کی تشکیل سے دستبرداری کے اعلان کے بعد ان کی جماعت المستقبل کے کارکنوں نے بیروت کی بعض سڑکوں کو بند کردیا اور پولیس اور فوج سے الجھ پڑے۔ اس دوران ہونے والی جھڑپوں میں متعدد افراد کے زخمی ہونے کی خبر ہے۔

صیدا، صور، نبطیہ، عکا، طرابلس ، زحلہ اور بعلبک سے بھی ایسے مظاہروں اور سڑکوں اور خیابانوں کو بند کیے جانے کی خبریں موصول ہوئی ہیں۔

لبنان کے سیکورٹی اداروں نے ملک کی سیاسی صورتحال سے ناجائز فائدہ اٹھانے والوں کو سخت خبردار کرتے ہوئے کہا کہ کسی کو بھی قانون ہاتھ میں لینے اور عوامی املاک کو نقصان پہنچانے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

بعض سیاسی تجزیہ نگار، لبنان کے اندرونی معاملات میں امریکی، سعودی اور فرانسیسی سفیروں کی مداخلت کو موجودہ سیاسی کشیدگی اور بدامنی کی اصل وجہ قرار دے رہے ہیں۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close