اہم ترین خبریںمقبوضہ فلسطین

داعش کی اسرائیل اور سعودی دوستی سامنے آ گئی، حماس کے خلاف دھمکی آمیز بیان جاری

شیعیت نیوز: وہابی دہشت گرد گروہ داعش نے ایران کے ساتھ تعلقات ہونے کی وجہ سے حماس کے خلاف دھمکی آمیز بیان جاری کیا ہے۔

فارس نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق دہشت گرد گروہ داعش کے ترجمان ابوحمزہ القرشی نے فلسطین کی اسلامی مزاحمتی تحریک حماس کے خلاف دھمکی آمیز بیان جاری کیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق، داعش کے سرغنہ نے اس بیان میں ایران کے ساتھ تعلقات ہونے کی وجہ سے حماس کے خلاف اٹھ کھڑے ہونے کا مطالبہ کیا ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ داعش نے اس سے پہلے بھی حماس کے خلاف بیان جاری کیا تھا اور تحریک کو مرتد قرار دیا تھا۔

داعش کے ترجمان نے اپنے ریکارڈیڈ بیان میں بوکو حرام کے سرغنہ ابو بکر شیکاؤ کے قتل پر رد عمل ظاہر کیا اور خوارج کے فتنے کی ہلاکت پر شمالی افریقہ میں داعش کی شاخ کو مبارکباد پیش کی ہے۔

واضح رہے کہ داعش دہشت گرد تنظیم کو امریکہ اور اسرائیل کی حمایت حاصل ہے اور اسے سعودی عرب کی طرف سے بڑی پیمانے پر مدد مل رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : افغان شیعوں کے خلاف کوئی کاروائی نہیں کریں گے، طالبان ترجمان کا اہم بیان

دوسری جانب موریتانیہ کے دورے پر موجود فلسطینی مزاحمتی تحریک حماس کے سربراہ اسماعیل ہنیہ نے موریتانیہ کے حکام اور اہم شخصیات کے ساتھ ملاقات میں تاکید کی ہے کہ حماس کے ایران و حزب اللہ کے ساتھ انتہائی قریبی تعلقات استوار ہیں۔

عرب چینل العالم کے مطابق اپنی گفتگو میں اسماعیل ہنیہ نے تاکید کی ہے کہ نہ صرف ایران کے ساتھ ہمارے ہمیشہ سے بہترین تعلقات استوار ہیں بلکہ حزب اللہ کے ساتھ بھی ہمارے انتہائی قریبی تعلقات ہیں جبکہ ان تعلقات کی نوعیت تزویراتی ہے۔

انہوں نے حماس کو حاصل ایران کی بے دریغ و وسیع حمایت کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران کی جانب سے بغیر کسی توقع یا شرط و شروط کے، فلسطینی مزاحمتی محاذ کی وسیع و ہمہ جانبہ حمایت کی جاتی ہے۔

ٹیگز
Back to top button
Close